دنیا کا سب سے بڑا ادارہ اقوام متحدہ مالی بحران کا شکار، 230ملین ڈالر کا خسارہ

5 تعبيرية بدھ 9 اکتوبر‬‮ 9102 - (شام 6 بجکر 84 منٹ)

شیئر کریں:

دنیا کا سب سے بڑا ادارہ اقوام متحدہ مالی بحران کا شکار، 230ملین ڈالر کا خسارہ نیو یارک : اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انتونیو گیوٹریس نے کہا ہے کہ عالمی ادارے کے مالی حالات بہت خراب ہوچکے ہیں حتیٰ کہ رواں ماہ عملے کی تنخواہوں کی ادائیگی کرنا بھی مشکل ہوگئی ہے۔

یہ بات انہوں نے ادارے کے مالی معاملات دیکھنے والی ففتھ کمیٹی کے اجلاس میں گفتگو کرتے ہوئے کہی، تفصیلات کے مطابق دنیا کا سب سے بڑا ادارہ اور اقوام عالم کا نمائندہ یو این بھی کنگال ہوگیا۔

ادارے کے پاس ملازمین کو نومبر کی تنخواہیں دینے کے لیے رقم بھی موجود نہیں۔ ففتھ کمیٹی کے اجلاس میں گفتگو کرتے ہوئے سیکریٹری جنرل نے کہا کہ ادارے کے مالی حالات اس قدر خراب ہیں کہ اقوامِ متحدہ کی جنرل اسمبلی کا اجلاس اس سال کی ابتداء میں ہنگامی بنیادوں پر کی گئی بجٹ کٹوتی کی وجہ سے ہی ممکن ہوسکا۔

اس کے علاوہ رکن ممالک کے واجبات کی عدم ادائیگی کے باعث پروگراموں کی منصوبہ بندی اور امن فوج کیلئے بھی رقم نہیں ہے، انہوں نے تمام ایسے ممالک سے واجبات کی فوری ادائیگی کی درخواست بھی کی جنہوں نے 2019ء میں اپنے حصے کی رقم ادا نہیں کی۔

سیکرٹری جنرل انتونیوگیوٹریس کے مطابق یو این ملازمین کی تعداد 30ہزار ہے اور اس وقت ادارے کو230ملین ڈالرخسارے کا سامنا ہے۔

رقم بچانے کیلئے غیرضروری ملاقاتوں اور سفرپ رپابندی عائد کردی گئی ہے،3اکتوبر تک193رکن ممالک میں سے128نے اپنے سال 2019کے واجبات ادا کردیے ہیں جبکہ بقیہ ممالک نے تاحال رقم فراہم نہیں کی۔